کیا بارش کے بعد آپ کے گھروں میں بھی پتنگے آجاتے ہیں؟ اب جانئیے ان کو بھگانے کے چند آسان طریقے

دنیا میں ہزاروں لاکھوں قسم کے کیڑے مکوڑے پائے جاتے ہیں جن میں سے کچھ گھروں میں آجاتے ہیں اور ان کے آنے کی وجوہات الگ الگ ہوتی ہیں۔ کچھ کیڑے جیسے کہ پتنگے وغیرہ شدید بارشوں کے بعد باہر آتے ہیں کیونکہ بارش کی وجہ سے ان کے گھروں کو نقصان پہنچتا ہے اور وہ محفوظ جگہ کی تلاش میں باغوں یا گھروں میں داخل ہو جاتے ہیں۔

اور ویسے بھی یہ موسم ان کی نئی نسلوں کی افزائش اور پرورش کا بہترین وقت ہوتا ہے۔ بارش کے بعد لوگوں کو کافی مسائل کا سامنا کرنا پڑھتا ہے اوپر سے بڑی تعداد میں پتنگے گھروں کا رخ کرلیتے ہیں جو اپنے ساتھ ساتھ جراثیم بھی لاتے ہیں اور جراثیموں سے مختلف انفیکشن ہوتے ہیں۔ آج ہم آپ کو ان کیڑے مکوڑوں سے چھٹکارہ حاصل کرنے کے کچھ طریقے بتائیں گے جن کی مدد سے آپ ان سے بچ سکتے ہیں اور بارش کے خوبصورت موسم سے لطف اندوز ہو سکتے ہیں۔

کیڑوں سے بچنے کے طریقے اور احتیاطی تدابیر: ۔ بارش کے موسم میں ضروری ہے کہ آپ اپنے جسم پہ تیل یا اوئنمنٹ لگائیں اس سے کیڑے آپکے جسم پر نہیں چپکیں گے اور نہ ہی کا ٹیں گے۔ ۔ مون سون کے موسم میں گھروں اور اگر گھر میں پیڑ پودے موجود ہیں تو ان میں بھی کیڑے مار اسپرے ضرور کروائیں کیونکہ یہ کیڑے وہاں اپنا گھر بنا کر انڈے دینے لگ جاتے ہیں۔ ۔ ان کیڑوں کو بھگانے کیلیئے آپ ان جگاؤں پر سٹرس اسپرے بھی کر سکتے ہیں جہاں انکی موجودگی کے امکان زیادہ ہوتے ہیں۔ سٹرس سپرے آپ گھر میں پانی اور لیموں کو آپس میں ملا کے بنا سکتے ہیں یا لیموں کی جگہ نارنجی کا استعمال بھی کرسکتے ہیں۔

کیونکہ یہ کیڑے سٹرس پھلوں کی خوشبو سے دور بھاگتے ہیں۔ ۔ کمرے میں کافور کی گالیاں رکھ دینے سے بھی یہ کیڑے چلے جاتے ہیں اسکی مہک سے۔ ۔ کوشش کریں کہ گھر کو خشک رکھیں کیونکہ نمی والی جگہ کیڑوں کو بہت پسند ہوتی ہے۔ ۔ پتنگے روشنی کی طرف زیادہ مائل ہوتے ہیں اس لیئے کوشش کریں کہ اس جگہ کی لائٹ بند رکھیں جہاں پتنگوں کے آنے کے زیادہ امکان ہوتے ہیں۔ ۔

گھر میں کھانے پینے کی چیزوں کو ڈھاک کر رکھیں ورنہ ان کیڑوں میں موجود جراثیم آپ کے کھانوں میں شامل ہو کے مختلف قسم کی بیماریوں کی وجہ بنیں گے۔ ۔ گھر کو صاف رکھیں اور ارد گرد کچرا جمع نہ کریں۔ ۔ کھڑکیوں اور دروازوں پر جالیاں لگا کر رکھیں۔

Add comment

Your Header Sidebar area is currently empty. Hurry up and add some widgets.