اگر آپ نہیں چاہتے کہ کھانے سے آپ کا وزن بڑھے تو بتائے گئے اس طریقے کو اپنائیں اور وزن میں کمی پائیں

وزن بڑھے تو بتائے گئے

خواتین اپنی صحت سے متعلق سوچیں نہ سوچیں مگر وہ اس بات پر ضرور زور دیتی ہیں کہ ان کا وزن ہر گز نہ بڑھے اور اس کے لئے وہ اتنی زیادہ محنت کرتی ہیں سارا دن کام تو کرتی ہیں لیکن دن میں ایک سے دو وقت کا کھانا بھی ترک کردیتی ہیں اور جسم کو بغیر خوراک کے چلاتی رہتی ہیں جس ے ان کے جسم میں کمزوری ہوجاتی ہے۔ اور کچھ خواتین ایسا بھی سوچتی ہیں کہ ہم ہر طرح کا کھانا کھائیں لیکن وزن نہ بڑھے کیونکہ گھر میں جب سب کے لئے

مذیدار کھانا بنتا ہے تو ہم کیوں نہ کھائیں۔وزن سے متعلق ماہرینِ صحت کہتے ہیں کہ ؛ ” کھانا اعتدال میں رہ کر کھائیں، سب کچھ کھائیں دن میں تین وقت کھائیں لیکن ایک پلان کے تحت جس میں ایک وقت کے کھانے میں فائبر بھی ہو، کاربوہائیڈریٹ بھی، پروٹین بھی اور کیلشئیم سمیت ضروری میگنیشئم بھی۔”ہر چیز ایک پلان کے تحت چلتی ہے جب ہی اس میں توازن برقرار رہتا ہے۔ اور اگر آپ اپنی خوراک میں توازن رکھنا چاہتے ہیں ساتھ میں وزن نہ بڑھنے کی خواہش بھی رکھتی ہیں تو اب چلیں اس پلان کے تحت کھائیں سب کچھ اور کریں وزن بھی کم وہ بھی اتنی آسانی سے۔۔آج ہم آپ کو ناشتے سے لے کر رات کے کھانے تک ایک مکمل ڈائٹ پلان بتا رہے ہیں جس کو روزانہ کی روٹین میں آپ شامل کرلیں اس طرح نہ تو وزن کم کرنے کے لئے کسی چیز کو کھانے میں دل

مارنا پڑے گا اور نہ ہی آپ کو کوئی پریشانی ہوگی۔ پیٹ بھر کر ناشتہ کریں اس میں جو کچھ کھانا چاہتے ہیں آپ استعمال کریں کوئی روک ٹوک نہیں بس چائے اور فروٹ کے جوسز کو ہر گز ناشتے میں استعمال نہ کریں بلکہ اس کی جگہ سادی بغیر دودھ کی چائے کا استعمال مفید ہے۔ناشتے سے ایک یا دو گھنٹے بعد اکثر لوگوں کو کچھ کھانے کا دل چاہ رہا ہوتا ہے ہلکی پھلکی بھوک بھی لگنے لگتی ہے ایسے میں آپ ایک سے دو پھل کا استعمال کرلیں یا دہی اور کھیرے یہ سب سے بہےتر طریقہ ہے ہلکی پھلکی بھوک کو کنٹرول میں رکھنے کے ساتھ ساتھ پیٹ کی ضرورت پوری کرنے کا۔>دوپہر کے کھانے میں آپ چاول کا استعمال کر رہی ہیں تو ہر گز روٹی ساتھ میں نہ کھائیں اور کھانے سے قبل پانی پیئیں۔ کھانے میں سبزی یا سلاد کا استعمال کرلیں۔ کچھ اور اگر نہیں ہے

سلاد میں تو ایک پیاز کا استعمال ہی بہت ہے۔ام کے وقت آپ چائے کے ساتھ ایسے سنیکس لیں جو آئلی نہ ہوں تاکہ کیلوریز بڑھ نہ سکیں۔ بسکٹس وغیرہ لے لیں

Leave a Comment